شمالی کوریا میں دنیا کے سب سے طاقتور آبدوز بیلسٹک میزائل کی رونمائی


شمالی کوریا میں حکمراں جماعت کی ایک تقریب میں فوجی پریڈ کے دوران دنیا کے سب سے طاقتور اور بڑے سب میرین لانچنگ بیلسٹک میزائل کی رونمائی بھی کی گئی۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق شمالی کوریا میں ایک فوجی پریڈ کے دوران بیلسٹک میزائل لانچنگ آبدوز کی رونمائی ہوئی،اسے سب میرینز میں دنیا کی سب سے طاقتور ٹیکنالوجی قرار دیا جا رہا ہے۔

اس موقع پر شمالی کوریا کے حکمراں کم جونگ اُن بھی موجود تھے اور جیسے ہی پریڈ میں سب میرین لانچنگ بیلسٹک میزائل داخل ہوئے انہوں نے مسکرایا اور ہاتھ ہلا کر خوشی کا اظہار کیا۔ اس سے قبل وہ ایک اجلاس میں ملکی معیشت کی ناکامی کا اعتراف کرتے ہوئے رو پڑے تھے۔

سخت گیر میڈیا پالیسی رکھنے والے شمالی کوریا کی زیادہ تر خبروں کے لیے سرکاری میڈیا پر ہی انحصار کرنا ہوتا ہے اور سرکاری میڈیا پر جاری ہونے والی تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بیلسٹک میزائل سے لیس سب میرین پر ’پکوگوکسونگ -5‘ کا لیبل لگا ہوا تھا۔

اس کا مطلب ہے کہ ممکنہ طور پر یہ ’پوکگوکسونگ 4‘ کی اپ گریڈیش ہے۔ ’پوکگوکسونگ 4‘ ہونے کا گزشتہ برس اکتوبر میں ایک بڑی فوجی پریڈ کے دوران نقاب کشائی کی گئی تھی۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹس ٹویٹر پر کیلی فورنیا میں قائم جیمز مارٹن سینٹر برائے نان پارولیفریشن اسٹڈیز کے ایک محقق مائیکل ڈیوٹس مین نے لکھا کہ تصاویر میں نیا میزائل یقینی طور پر طویل تر ہے۔

اسی طرح کارنیگی انڈوومنٹ برائے بین الاقوامی امن کے جوہری پالیسی پروگرام میں ایک سینئر فیلو انکیت پانڈا نے بھی لکھا کہ خطے سے باہر پہلے سے بھرپور طریقے سے دشمنوں کو مکمل طور پر ختم کرنے کے لئے طاقتور صلاحیتوں والے راکٹس بھی نمائش میں موجود تھے۔

ماہرین کی رائے ہیں کہ سب میرین لانچنگ بیلسٹک میزائل کی رینج بہت زیادہ ہے اور یہ جزیرہ نما کوریا سے آگے بھی اور کم سے کم جاپان تک ہدف کو نشانہ بن سکتی ہے۔



Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *